آج کی رات Aaj Ki Raat

میرے سرکار کو یہ رتبہ ملا آج کی رات

میرے سرکار کو یہ رتبہ ملا آج کی رات
اُس کا مداح ہوا رب العلٰی آج کی رات

عرش پر شاہ مدینہ کو بلا کر حق نے
ہم گناہگاروں پر احسان کیا آج کی رات

مرحبا صل علٰی شان کریمی کے نثار
جھوم کر برسا کیا ابر عطا آج کی رات

رف رفِ شاہ مدینہ کی یہ رفتار لطیف
رہ گئی پیچھے بہت پیچھے ہوا آج کی رات

حق نے بخشی تھی ستاروں کو مہ کامل کو
روئے سرکار مدینہ کی ضیاء آج کی رات

زاہدوں کو تو عطا کی ہی تھی جنّت
ہم گناہگاروں کو بھی بخش دیا آج کی رات

حق کے محبوب ملے جنّتِ فردوس ملی
اور کیا چاہئیے سب کچھ تو ملا آج کی رات

فرش سے عرش پہ پہنچے جو شہ ہر دوسرا
مل گئے مہر گل عرض و سماں آج کی رات

میرے سرکار کو یہ رتبہ ملا آج کی رات
اُس کا مداح ہوا رب العلٰی آج کی رات

This entry was posted in Home, Meraj un Nabi. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s